The news is by your side.
Güvenilir bahis siteleri 2022
betsat
mecidiyeköy escort mecidiyeköy escort etiler escort etiler escort taksim escort beşiktaş escort şişli escort bakırköy escort ataköy escort şirinevler escort avcılar escort esenyurt escort bahçeşehir escort istanbul escort sakarya escort sakarya escort sakarya escort sakarya escort sakarya escort alanya escort alanya escort alanya escort alanya escort alanya escort alanya escort
mariobet.biz
betwoon kayıt
deneme bonusu veren siteler
canlı casino
kralbet betturkey 1xbetm.info wiibet.com tipobet deneme bonusu veren siteler mariobet supertotobet bahis.com
bailarinas de la hora pico Britney Shannon barely keeping whole thing in her throat Nicole Nix obtient saucissonner par un russe mec sur une table
etimesgut escort eryaman escort sincan escort etlik escort keçiören escort kızılay escort çankaya escort rus escort demetevler escort esat escort cebeci escort yenimahalle escort
gaziantep escort
gaziantep escort
modabet giriş
ankara escort escort ankara escort
Tipobet365
Canlı Kumar
istanbul evden eve nakliyat
Group of passionate teen angels lick every other Hottie babe Lou Charmelle fucking a black meat Milf Nina Elle gets fucked in dogystyle
istanbul masaj salonuistanbul masaj salonuhttp://www.escortperl.com/Gaziantep escortDenizli escortAdana escortHatay escortAydın escortizmir escortAnkara escortAntalya escortBursa escortistanbul escortKocaeli escortKonya escortMuğla escortMalatya escortKayseri escortMersin escortSamsun escortSinop escortTekirdağ escortEskişehir escortYalova escortRize escortAmasya escortBalıkesir escortÇanakkale escortBolu escortErzincan escort

بلدیاتی اداروں کی مضبوطی، پی ٹی آئی کا سوروزہ منشور اہمیت اختیارکرگیا

بلدیاتی اداروں کی مضبوطی کےحوالے سے تحریک انصاف کی سو روزہ انتخابی منشور کواہمیت حاصل ہوگئی ہے۔سندھ کراچی سمیت پورے ملک میں میں تحریک انصاف بلدیاتی نظام کی مضبوطی کے حوالے سے اپنا واضع موقف پہلے ہی دے چکی ہے بلدیاتی اداروں کو مضبوط کرنے کے حوالے سے تحریک انصاف نے اپنے سو روزہ انتخابی منشور میں اسے انتہائی اہمیت دی ہے۔

عمران خان کے بطور وزیراعظم عہدہ سنبھالنے کے بعد یہ عمل اور بھی اہمیت حاصل کرگیا ہے، اصل زمینی حقائق کا جائزہ لیا جائے تو اس وقت پاکستان میں اٹھارویں ترمیم کے بعد صوبائی خود مختاری کے تحت صوبوں کو آرٹیکل (140 اے) کے تحت بلدیاتی نظام رائج کرنے کے اختیارات ہیں اور اس اختیار کو ہرجصوبے نے رائج بھی کیا ہوا ہے صوبہ سندھ اور پنجاب میں جو بلدیاتی نظام رائج ہے اسے آرٹیکل 140 اے کے منافی قرار دیا جا رہا ہے اس ضمن میں ایم کیوایم پاکستان نے پٹیشن بھی دائر کر رکھی ہے۔

تحریک انصاف حامی ہے کہ اختیارات کا مین مرکز گراس روٹ لیول ہو تاکہ خدمات کی فراہمی براہ راست عام آدمی تک پہنچ سکے جو کہ راست اقدام دکھائی دیتا ہے مگر اس کیلئے اسے ملک بھر میں یکساں اور طاقتور بلدیات کا سیٹ اپ درکار ہے تحریک انصاف کو اس اقدام کو حتمی شکل دینے کیلئے کئی قانونی مشکلات کا سامنا کرنا پڑے گا۔

اس کام کو کرنے کیلئے دواقدامات کرنے پڑ سکتے ہیں پہلا اٹھارویں ترمیم کا خاتمہ کر کے صوبائی خود مختاری ختم کر دی جائے جو کہ انتہائی مشکل کام ہے کیونکہ چاروں صوبے اس عمل میں بدترین مخالفت کے طور پر سامنے آسکتے ہیں جبکہ اسے سینیٹ سے منظور کروانا بھی اس وقت ناممکنات میں سے ہے، دوسرا اٹھارویں ترمیم میں مزید ترمیم کر کے بلدیات کے حوالے سے اختیارات سلب کر کے وفاق کے کنٹرول میں لے لئے جائیں لیکن اس اقدام کو کرنے کے لیے ایم کیوایم کی دائر پٹیشن میں تحریک انصاف کو بھرپور معاونت فراہم کرنی ہوگی تاکہ عدلیہ کا مثبت فیصلہ آنے کی صورت میں ترمیم کرنے کا جواز پیدا ہوسکے۔

دونوں صورتوں میں سینیٹ کی منظوری مرکزی کردار ادا کرے گی اگر ان دو میں سے کسی ایک پر عمل درآمد ہوگیا تو پاکستان میں یکساں بلدیاتی نظام آسکتا ہے ورنہ تحریک انصاف کو اس دعویٰ سے دستبردار ہونا پڑے گا اب دیکھنا ہوگا کہ تحریک انصاف دئیے گئے سو روزہ انتخابی منشور میں شامل طاقتور بلدیات اور گراس روٹ لیول تک اختیارات کا معمہ یا وعدہ کس طرح پورا کرے گی یا راہ فرار اختیار کرے گی،اس وقت تحریک انصاف اگر پورے ملک میں یکساں بلدیاتی نظام نافذ کرنے میں کامیاب ہوگئی تو یہ اس کی بہت بڑی کامیابی تصور کی جائے گی۔

Print Friendly, PDF & Email
شاید آپ یہ بھی پسند کریں