The news is by your side.
Güvenilir bahis siteleri 2022
betsat
mecidiyeköy escort mecidiyeköy escort etiler escort etiler escort taksim escort beşiktaş escort şişli escort bakırköy escort ataköy escort şirinevler escort avcılar escort esenyurt escort bahçeşehir escort istanbul escort sakarya escort sakarya escort sakarya escort sakarya escort sakarya escort alanya escort alanya escort alanya escort alanya escort alanya escort alanya escort
mariobet.biz
betwoon kayıt
deneme bonusu veren siteler
canlı casino
kralbet betturkey 1xbetm.info wiibet.com tipobet deneme bonusu veren siteler mariobet supertotobet bahis.com
bailarinas de la hora pico Britney Shannon barely keeping whole thing in her throat Nicole Nix obtient saucissonner par un russe mec sur une table
etimesgut escort eryaman escort sincan escort etlik escort keçiören escort kızılay escort çankaya escort rus escort demetevler escort esat escort cebeci escort yenimahalle escort
gaziantep escort
gaziantep escort
modabet giriş
ankara escort escort ankara escort
Tipobet365
Canlı Kumar
istanbul evden eve nakliyat
Group of passionate teen angels lick every other Hottie babe Lou Charmelle fucking a black meat Milf Nina Elle gets fucked in dogystyle
istanbul masaj salonuistanbul masaj salonuhttp://www.escortperl.com/Gaziantep escortDenizli escortAdana escortHatay escortAydın escortizmir escortAnkara escortAntalya escortBursa escortistanbul escortKocaeli escortKonya escortMuğla escortMalatya escortKayseri escortMersin escortSamsun escortSinop escortTekirdağ escortEskişehir escortYalova escortRize escortAmasya escortBalıkesir escortÇanakkale escortBolu escortErzincan escort

“ہر بار محبت میں خسارہ نہیں ہوتا …”(شاعرہ: سدرہ ایاز)

سدرہ ایاز مختلف سماجی موضوعات پر مضامین سپردِ قلم کرنے اور بلاگ لکھنے کے علاوہ شاعری بھی کرتی ہیں۔ ان کا تعلق کراچی سے ہے۔ انھوں نے غزل اور نظم دونوں اصنافِ سخن میں‌ طبع آزمائی کی ہے۔ یہاں‌ ہم ان کی ایک غزل باذوق قارئین کی نذر کررہے ہیں۔ ملاحظہ کیجیے۔

غزل

بے مہر مقدر کا ستارہ نہیں ہوتا

ہر بار محبت میں خسارہ نہیں ہوتا

پیارا تو ہمیں ہوتا ہے ہر دوست ہمارا

ہر دوست مگرجان سے پیارا نہیں ہوتا

کھو جاتے ہیں اشکوں کی روانی میں یوں منظر

دیدوں سے پلک تک بھی نظارہ نہیں ہوتا

پلکوں پہ سجا رکھنا غمِ یار کے موتی

ویران سمندر کا کنارہ نہیں ہوتا

اے حسن! تغافل سے بھی کچھ کام لیا کر

اب مہرومروّت سے گزارہ نہیں ہوتا

لگ جاتی نظر تجھ کو زمانے کی اے سدرہؔ

صدقہ تیر ی ماں نے جو اتارا نہیں ہوتا

Print Friendly, PDF & Email
شاید آپ یہ بھی پسند کریں