The news is by your side.
betsat

bettilt

anadolu yakası escort bostancı escort bostancı escort bayan kadıköy escort bayan kartal escort ataşehir escort bayan ümraniye escort bayan
kaçak bahis siteleri canlı casino siteleri
kralbet betturkey 1xbetm.info wiibet.com tipobet deneme bonusu veren siteler mariobet supertotobet bahis.com
maslak escort
istanbul escort şişli escort antalya escort
en iyi filmler
etimesgut escort eryaman escort sincan escort etlik escort keçiören escort kızılay escort çankaya escort rus escort demetevler escort esat escort cebeci escort yenimahalle escort
aviator oyunu oyna lightning rulet siteleri slot siteleri

کتنے سندر لگنے لگے ہیں اک تصویر میں، میں اور تم….

غزل
عشق نگر میں ،پیارکے گھر میں، دل زنجیر میں، میں اور تم
کتنے سندر لگنے لگے ہیں اک تصویر میں میں اور تم

مومن کا سا رنگ دکھے اور غم شوخی میں ڈھل جائے
بندھ جائیں گر کسی طرح سے مصرع ِمیر میں، مَیں اور تم

آؤ مل کر خواب ہم دیکھیں خواب بھی جگنو تتلی کا
آنکھ کے کھلتے ہی مل جائیں پھر تعبیر میں میں اور تم

خوابوں کے اس تاج محل میں ہم دونوں نے رہنا ہے
یار برابر خرچ ہوئے ہیں اس تعمیر میں،میں اور تم

ہر ایک پریم کہانی مجھ کو اپنا قصہ لگتی ہے
اب تو مجھ کو دکھنے لگے ہیں رانجھا ہیر میں میں اور تم

شاعر: ثروت مختار

Print Friendly, PDF & Email