The news is by your side.
Güvenilir bahis siteleri 2022
betsat
mecidiyeköy escort mecidiyeköy escort etiler escort etiler escort taksim escort beşiktaş escort şişli escort bakırköy escort ataköy escort şirinevler escort avcılar escort esenyurt escort bahçeşehir escort istanbul escort sakarya escort sakarya escort sakarya escort sakarya escort sakarya escort alanya escort alanya escort alanya escort alanya escort alanya escort alanya escort
mariobet.biz
betwoon kayıt
deneme bonusu veren siteler
canlı casino
kralbet betturkey 1xbetm.info wiibet.com tipobet deneme bonusu veren siteler mariobet supertotobet bahis.com
vip escort Bitlis escort Siirt escort Çorum escort Burdur escort Diyarbakir escort Edirne escort Düzce escort Erzurum escort Kırklareli escort
etimesgut escort eryaman escort sincan escort etlik escort keçiören escort kızılay escort çankaya escort rus escort demetevler escort esat escort cebeci escort yenimahalle escort
gaziantep escort
gaziantep escort
modabet giriş
ankara escort escort ankara escort
Tipobet365
Canlı Kumar
istanbul evden eve nakliyat
Group of passionate teen angels lick every other Hottie babe Lou Charmelle fucking a black meat Milf Nina Elle gets fucked in dogystyle

“نشانہ “

“نشانہ”(نظم)
عمارت کے اندر نقب لگا کر
میرے بچّوں پر جب گولیاں برسائی گئیں
میں سمجھا،
وہ مجھے توڑ کر ریزہ ریزہ کرنا چاہتا ہے

میری زمین پر دور تک
کھڑی دھان کی فصلیں سرخ زبان والے
غڑمبا آوازوں کے ساتھ جلانے والے شعلوں کی
کی لپیٹ میں تھے
اور میں سمجھا وہ مجھے بھسم کرنا چاہتا ہے

گھر، جس کی دیواریں
اس خیال کے ساتھ اٹھائی گئی تھیں
ان میں حاملہ مائیں اور بوڑھے باپ
بے فکری سے دھوپ سینکنے
اور لال ٹین کی روشنی میں بلندی سے نیچے گرنے کے خواب
اور بھینسوں کے باڑے میں نہانے کے عجیب سپنے دیکھیں گے
انھیں بموں سے اڑا دیا گیا
میں سمجھا، اس نے مجھے برباد کرنا چاہا

ایک دن بازار کی رونق
جہنم کا نظارہ بنا
شیطان نے دم دار ستارے کی مانند
راکھ کا ڈھیر چھوڑ دیا
دھویں کی لکیر افق تک چلی گئی
اور مجھے لگا
وہ میرے بدن میں ان گنت چھید کر کے
بے بس کر دینا چاہتا ہے

پھر اس نے میرے رہبر کو مار دیا
منزل بھی چھن گئی
راستہ اتنا زخمی ہوا
کہ میرے قدموں کا بوجھ بھی سہار نہ سکا
مجھے پہلی بار معلوم ہوا
راستے کا کرب ہر کرب سے سوا ہے
یہ تلوؤں سے ہو کر بدن کے مساموں سے گزر کر دل
اور دل سے دماغ
اور دماغ سے روح میں جا گھستا ہے
اور میں سمجھا
اس بار وہ مجھے مارنے میں کام یاب ہو گیا

تو اب
ہاں، یہ سب دیکھنے کے بعد میں جان گیا
میں نشانہ نہ تھا
طاقت ور کبھی نشانہ نہیں ہوتے
اُس پر یقین رکھنے والے کم زوروں کو
اور کم زور بنانے
ان کا یقین اور پختہ کرنے
انھیں مزید جھکانے
اور کم زوروں سے بھری اس دنیا کو اسی طرح قائم رکھنے کے لیے
اس نے بہت سارے وار کیے
جو مجھ پر تھے ہی نہیں

Print Friendly, PDF & Email
شاید آپ یہ بھی پسند کریں