The news is by your side.
Güvenilir bahis siteleri 2022
betsat
mecidiyeköy escort mecidiyeköy escort etiler escort etiler escort taksim escort beşiktaş escort şişli escort bakırköy escort ataköy escort şirinevler escort avcılar escort esenyurt escort bahçeşehir escort istanbul escort sakarya escort sakarya escort sakarya escort sakarya escort sakarya escort alanya escort alanya escort alanya escort alanya escort alanya escort alanya escort
mariobet.biz
betwoon kayıt
deneme bonusu veren siteler
canlı casino
kralbet betturkey 1xbetm.info wiibet.com tipobet deneme bonusu veren siteler mariobet supertotobet bahis.com
bailarinas de la hora pico Britney Shannon barely keeping whole thing in her throat Nicole Nix obtient saucissonner par un russe mec sur une table
etimesgut escort eryaman escort sincan escort etlik escort keçiören escort kızılay escort çankaya escort rus escort demetevler escort esat escort cebeci escort yenimahalle escort
gaziantep escort
gaziantep escort
modabet giriş
ankara escort escort ankara escort
Tipobet365
Canlı Kumar
istanbul evden eve nakliyat
Group of passionate teen angels lick every other Hottie babe Lou Charmelle fucking a black meat Milf Nina Elle gets fucked in dogystyle
istanbul masaj salonuistanbul masaj salonuhttp://www.escortperl.com/Gaziantep escortDenizli escortAdana escortHatay escortAydın escortizmir escortAnkara escortAntalya escortBursa escortistanbul escortKocaeli escortKonya escortMuğla escortMalatya escortKayseri escortMersin escortSamsun escortSinop escortTekirdağ escortEskişehir escortYalova escortRize escortAmasya escortBalıkesir escortÇanakkale escortBolu escortErzincan escort

حضرت امام جعفر صادق رضی اللہ عنہ کے سائنسی ارشادات

ہم لوگوں کو حضرت امام جعفر صادق رضی اللہ عنہ صرف رجب کے کونڈوں پر ہی یاد آتے ہیں اس کے علاوہ ہمیں کچھ خبر نہیں کہ اتنی عظیم ہستی نے کیا کیا رموز کھولے ہیں۔ سائنس میں بھی ان کے بے پناہ ارشادات ہیں۔ جابر بن حیان کے نام سے کون واقف نہیں وہ آپ ہی کا شاگردِ رشید تھا۔ آپ حضرت امام جعفر رضی اللہ عنہ کےدرج ذیل کچھ ارشادات سنیں اور سوچیں کہ ہمارے اسلاف کیا تھے ۔ ہم لوگ اپنے اسلاف کو صرف عبادت گذار ہونے کے اور کچھ سمجھتے ہی نہیں ہیں۔

دنیا ایک چھوٹے سے چھوٹے ذرے سے وجود میں آئی ہے اور وہ ذرہ بھی دو متضاد قطبین سے مل کر بنا ہے۔ اسی طرح مادہ وجود میں آیا پھر مادہ کی اقسام بن گئیں اور یہ اقسام مادے میں ذرات کی کمی بیشی کا نتیجہ ہیں (ایٹمی تھیوری) جو ستارے ہم آسمان پر دیکھتے ہیں ان میں کچھ ایسے بھی ہیں جن کی روشنی کے مقابلے میں سورج کی روشنی بالکل مدھم ہے۔ (جن کو آج سائنس نے کوازر ستارے کا نام دیا ہے) ہوا ایک عنصر نہیں ہے بلکہ ہوا میں چند اجزا ہوتے ہیں جن کی موجودگی سانس لینے کے لیے ضروری ہے (اس زمانے میں عناصر اربعہ کا نظریہ رائج تھا لیکن آپ نے اس پر تنقید کی) تمام وہ اشیا جو مٹی میں پائی جاتی ہیں انسانی بدن میں موجود ہیں۔

انسانی بدن میں چار عناصر زیادہ مقدار میں اور آٹھ عناصر اس سے کم مقدار میں اور پھر آٹھ عناصر اس سے بھی کم مقدار میں پائے جاتے ہیں۔ سائنس کے مطابق بھی ان عناصر کی ترتیب یہ ہے۔ پہلے چار آکسیجن،کاربن، نائٹروجن اور ہائیڈروجن۔ پھر آٹھ میگنیشیم، سوڈیم، پوٹاشیم، کیلشیم، فاسفورس، کلورین، سلفر اور آئرن۔ پھر ان سے بھی کم مقدار میں پائے جانے والے آٹھ عناصر مولیسیڈنم، سیلینیم، فلورین، کوبالٹ، مینگانیز، تانبا، آیوڈین اور زنک ہیں۔)

کسی چیز کے نظر آنے کےلیے اس کا بذاتِ خود روشن ہونا یا روشنی کا اس چیز سے ٹکرا کر ہماری آنکھوں میں آنا ضروری ہے۔ جس قدر روشنی ہماری آنکھ میں داخل ہوتی ہے اس قدر ہمیں صاف نظر آتا ہے دور کی چیز ہمیں اسی لیے دھندلی نظر آتی ہے کیونکہ اس سے ٹکرا کر آنے والی روشنی کی بہت کم مقدار ہماری آنکھوں میں داخل ہو پاتی ہے دنیائیں صرف ایک یا دو نہیں ہیں بلکہ بے شمار ہیں جن کا شمار کرنا انسانی عقل سے بعید ہے (آج کی سائنس بھی یہی کہتی ہے) ۔

Print Friendly, PDF & Email
شاید آپ یہ بھی پسند کریں