غیر محفوظ جھولے اہم یا جان ؟

نوید کے گھر میں آج صف ماتم بچھی تھی اس کا ننھا بچہ جو پارک میں اہل خانہ کے ساتھ سیر کرنے گیا تھا وہیں جھولے لینے کی ضد بھی کرنے لگا تھا ، معصوم شازل یہ جانتا نہیں تھا کہ ہمارے ملک کے پارکوں کے جھولے بھی محفوظ نہیں ، ان کے راڈ کبھی بھی کھل سکتے ہیں ، جھولوں کی مرمت کبھی نہیں ہوتی اور نتیجہ یہی ہوتا ہے کہ عام آدمی کا کوئی بھی بچہ زخمی ہو سکتا ہے ، ہاں لیکن یہ حقیقت تو اب نوید اور اس کی بیوی جان چکے تھے کہ ایسا المیہ صرف غریبوں کے بچوں کے ساتھ ہی ہوتا ہے۔

کیونکہ ہماری اشرافیہ اور ان کے اہل خانہ کسی بھی بم دھماکہ میں اپنی جان نہیں گنواتے ، کوئی انھیں ٹارگٹ کلنگ کا نشانہ نہیں بناتا ، ٹریفک کے حادثات ، ریپ ، لینڈ مافیا اور حادثاتی موت کے واقعات ان اہم شخصیات اور ان کے رشتے داروں کے ساتھ نہیں ہوتے۔


اگر ہم اپنے ملک میں تفریحی مقامات کی بات کریں تو وہاں ناقص انتظامات ، صفائی کی غیر تسلی بخش صورتحال ، باسی کھانوں کا فروخت ہونا اور اس طرح کے دوسرے مسائل کی موجودگی کے ساتھ ساتھ ایک اہم مسئلہ بچوں کے لئے جھولوں کی درست تنصیب نہ ہونا اور ان کی مناسب مرمت نہ ہونا بھی شامل ہیں ۔

ستمبر15‘ دو ہزار سولہ کو ملتان کے جناح پارک میں جھولا گرنے سے ایک نوجوان جاں بحق اور انیس زخمی ہوئے تھے کیونکہ الیکٹرک جھولے کا لاک کھل گیا تھا ۔ تاہم جھولا گرنے کے واقعات صرف پاکستان میں ہی نہیں بلکہ دنیا بھر میں ہوتے ہیں لیکن ہمارے ملک کے مقابلے میں ان کا تناسب خاصا کم ہے ۔

چین میں گذشتہ سال ایک چودہ سال کی بچی ایک سوئنگ رائڈ سے گر کر ہلاک ہوئی تھی ایک جائزے کے مطابق جھولا گرنے کے واقعات میں مختلف جھولوں سے گرنے کا تناسب مختلف ہے جن میں اونچائی پر چڑھنے والے جھولوں سے ۲۳ فیصد، سلائیڈز سے اکیس فیصد ، راونڈ اباؤٹ سے پانچ فیصد ، سی سا سے چار فیصد اموات واقع ہوتی ہیں ، دنیا بھر میں ہر سال بچوں کے جھولوں سے گرنے میں چالیس ہزار سے زائد انجریز ہوتی ہیں ۔

اگر ہم جھولا گرنے کے واقعات اور ان کے اسباب پر بات کریں تو درج ذیل چیزیں سامنے آتی ہیں۔

ہمارے ہاں پارکوں میں زیادہ تر یہ بھی نہیں لکھا جاتا کہ جو جھولے لگائے گئے ہیں وہ کتنی عمر تک کے بچوں کے لئے ہیں ؟ غریب کا بچہ صرف تفریح چاہتا ہے اور ہر شخص خواندہ بھی نہیں ہے تو اگر کسی جگہ پر عمر کے بارے میں معلومات بھی ہیں تو لوگ اس سے واقف نہیں ہو سکتے ۔

بچوں کے لئے کئی پارکس میں گراونڈ لیول بھی نہیں کیا جاتا جس کی وجہ سے بھی جھولوں کی تنصیب ٹھیک نہیں ہوتی اور بیلنس نہ ہونے کی وجہ سے بھی حادثات رونما ہوتے ہیں ۔

جھولوں کی تنصیب کے بعد ان کی مناسب مرمت بھی نہیں کی جاتی ، اکثر کنٹریکٹرز چند پیسوں کی خاطر بچوں کی قیمتی زندگیوں سے کھیل رہے ہیں اور ان کا احتساب کرنے والا کوئی نہیں ۔

پارکوں اور تفریح گاہوں میں جو جھولے لگائے جاتے ہیں ان کے لئے ناقص پرزہ جات اور ساز و سامان استعمال کیا جاتا ہے جس کی وجہ بھی یہ سانحات واقع ہوتے ہیں ۔

یہ بات بھی سو فیصد درست ہے کہ بچے ہوں یا بڑے جھولوں پر بیٹھتے وقت اپنے لباس کا بالکل خیال نہیں رکھتے ، خواتین کے دوپٹے اورچادریں جبکہ بچیوں کے فراک نہایت آسانی سے جھولوں کے پرزہ جات میں پھنس جاتے ہیں اور حادثات رونما ہوتے ہیں۔

جھولے چلانے والے اکثر افراد غیر تربیت یافتہ ہوتے ہیں جنہیں نہ تو بنیادی معلومات کا علم ہوتا ہے اور نہ ہی انھیں سانحات سے نمٹنے کی کوئی تربیت دی جاتی ہے ۔بجلی کے جھولے ہونے کی صورت میں اگر بجلی چلی جاتی ہے تو کوئی جنریٹرز وغیرہ موجود نہیں ہوتے کہ جھولوں میں بیٹھنے والے افراد کے تحفظ کے لئے کچھ کیا جا سکے ۔

جب ہم تفریح کی بات کرتے ہیں تو اس کے لئے فراہم کردہ سہولیات کی تمام تر ذمہ داری حکومت پر نہیں ڈالی جا سکتی کیونکہ کئی پارکس ایسے بھی ہیں جنہیں کئی مخیر حضرات نے قائم کیا ہے اور ان کی مینٹینس ان کی ذمہ داری ہے ، عام شہریوں کو بھی اپنے فرائض سے غافل نہیں ہونا چاہیے کہ جہاں انھیں جھولوں میں کسی قسم کی خرابی کا علم ہو پارک کی انتظامیہ کو اس سے آگاہ کریں ۔

فرائض کی ادائیگی کے ساتھ ساتھ سب کا احتساب اور متعلقہ اداروں کا بااختیار ہونا ضروری ہے تاکہ ان افسوناک واقعات کے ذمہ داران کو کہٹرے میں لایا جا سکے۔

راضیہ سید: راضیہ سید پنجاب یونیورسٹی سے سیاسیات میں ماسٹرز کی ڈگری کی حامل ہیں اور ایک دہائی سے زائدعرصے سے شعبہ صحافت سے بطور رپورٹر ، پروڈیوسر اور محقق وابستہ ہیں ، مختلف اخبارات اور ٹی وی چینلز کے لئے کالم اور بلاگز تحریر کرتی ہیں۔

View Comments (37)

  • There you go. Well done Nawaz. You are real democrat... all you need is your puppets all around and whoever rejects to be, this is what you do. Imram knan was right. Your best weapon is "Intaqami Qarwayee". Shame on you!

  • We, the Pakistanis living abroad who heavily rely on ARY News for bringing facts and updates of what is happening in Pakistan unbiased New, hereby condemn this action of PEMRA. This is against the freedom of expression and freedom of press and against the values of Democracy. It is nothing but revenge, an decision taken under the influence of those who were exposed. We demand immediate reversal of this decision and reinstate the broadcast of this channel. Ary did not show anything that is not true and revealing the truth is not a crime and should be taken positively. If we are prevented from watching these criminal activities by the politicians, Allah is watching us.

  • Ordinary public never knew how these organisations were being runned i.e by people of your own choice. Its only for Mubashar Luqman now we know how corrupt the whole system is. We should make this move Governments fatal mistake which will finally bring it down. Final nail in the coffin!!!

  • PMLN kbi okaat sa barh kar kaam nai kar sakta.... If People can come out against the lie (Nawaz) than we can also come out in the favor of truth (ARY) . ML is controversial because he only talks against corruption of PMLN (Being biggest corrupt party) but banning ARY is totally wrong.

  • Ary is mostly watched channel here in UK by pakistanis bcz it's patriot truthful coverage and unlike Geo Jang traitors it's dissent sell its self out to Indians or nawaz sharif etc. Nawaz one of the most corrupt person in Pakistan only wants corrupt ppl like him to head and lead institutions and defend his corruption he can't tolerate anyone speaking truth . Shame on this corrupt govt corrupt judiciary who never speak for ppl but only for their vested corrupt interests

  • SHAME ON YOU GOVT , Doob kr mur jaoo NAWAZ and its chaprasi, Yar sub mil kr khatam karoo is so called GOVT ko, I am not political agents I am PAkistani...aur mein sirf ARY news hi dekhta hun.....Mubasshir Luckman is my favorite anchor. This is first time I msg any media....

    Yar sari awaam mil kr maar dalo saloo govt chaprasi ko, Nawaz humara chapdasi hai, sala humary tax ki qamai aur bheeg khata hai aur sala agent India ka hai...

    Lucman Dont worry hum sab ki dua ap ky saath hai kuch nahi hoga... ARY NEWS don't follow any order, Be with Imran Khan and do not accept any order.

  • Support ARY
    Support Geo
    DO NOT BLOCK ANY MEDIA OUTLET
    EVEN IF YOU DO NOT LIKE WHAT THEY HAVE TO SAY
    Support All kind of FREE PRESS, ELECTRONIC OR PRINT MEDIA
    Support freedom of speech and freedom of Expression